Prevention of Copy Paste


  • تازہ اشاعتیں

    ہفتہ, جولائی 23, 2016

    گیتوں یا نغموں کی شاعری یاد کرنا اتنا آسان کیوں ہوتا ہے ؟




    ہمارا دماغ اس طرح سے بنا ہوا لگتا ہے کہ وہ نغموں کی شاعری کو حقائق سے بلکہ اس سے بھی بہتر طور پر یاد رکھ سکے کہ رات کو ہم نے کیا کھایا تھا۔ جب آپ نغمے کی شاعری یاد کرتے ہیں تو ساتھ ساتھ آپ موسیقی اور آواز کو بھی یاد کر رہے ہوتے ہیں، لہٰذا آپ اس کی یاد کے لئے آپ کے دماغ کو رسائی کے لئے کافی زیادہ چیزیں دستیاب ہوتی ہیں۔ اگر آپ گیت کو بار بار سنتے ہیں تو اس کا دہرانا بھی آپ کو اسےیاد رکھنے میں مدد دیتا ہے۔ یہ مشق کی ایک شکل ہے۔ نغمے کی دھن، جیسے سر یا گیت کے شعر بھی ہمارے دماغ کو اس کو یاد رکھنے میں مدد دیتے ہیں۔ آخر میں، اگر آپ کو گانا پسند ہے، آپ کا دماغ اس کو یاد رکھنے کے لئے جذباتی وابستگی کی وجہ سے سخت محنت کرے گا۔
    • بلاگر میں تبصرے
    • فیس بک پر تبصرے

    0 comments:

    Item Reviewed: گیتوں یا نغموں کی شاعری یاد کرنا اتنا آسان کیوں ہوتا ہے ؟ Rating: 5 Reviewed By: Zuhair Abbas
    Scroll to Top